#10022

مصنف : صلاح الدین بن محمد البدیر

مشاہدات : 550

سعادتوں کا سفر

  • صفحات: 758
  • یونیکوڈ کنورژن کا خرچہ: 26530 (PKR)
(ہفتہ 21 نومبر 2020ء) ناشر : نا معلوم

اخروی  نجات ہر مسلمان کا مقصدِ زندگی  ہے  جو صرف اور صرف توحیدِ خالص پرعمل پیرا ہونے سے پورا ہوسکتا ہے۔ جبکہ مشرکانہ عقائد واعمال انسان کو تباہی کی راہ پر ڈالتے ہیں جیسا کہ قرآن کریم نے  مشرکوں کے لیے  وعید سنائی ہے ’’ اللہ تعالیٰ شرک کو ہرگز معاف نہیں کرے گا او اس کے سوا جسے  چاہے معاف کردے گا۔‘‘ (النساء:48) لہذا شرک کی الائشوں سے بچنا  ایک مسلمان کے لیے ضروری  ہے ۔اس کے بغیر آخرت کی نجات ممکن ہی نہیں ۔ حضرت  نوح ﷤ نے ساڑے نوسوسال کلمۂ توحید کی  طرف لوگوں کودعوت دی ۔ اور   اللہ کے آخری  رسول سید الانبیاء خاتم النبین سیدنا محمد ﷺ نےبھی عقید ۂ  توحید کی دعوت کے لیے کس قدر محنت کی اور اس  فریضہ کو سر انجام دیا  کہ جس کے بدلے   آپ ﷺ کو طرح طرح کی تکالیف ومصائب سے دوچار ہوناپڑا۔ عقیدہ توحید کی تعلیم وتفہیم کے لیے   جہاں نبی  کریم ﷺ اورآپ  کے صحابہ کرا م ﷢ نے بے شمار قربانیاں دیں اور تکالیف کو برداشت کیا  وہاں  علمائے اسلام نےبھی عوام الناس کوتوحید اور شرک کی حقیقت سےآشنا کرنے کےلیے  دن رات اپنی  تحریروں اور تقریروں میں اس کی اہمیت کو  خوب واضح کیا ۔ہنوز یہ  سلسلہ جاری  وساری ہے۔ زیر نظر کتاب’’ سعادتوں کا سفر‘‘  فضیلۃ الشیخ صلاح بن محمد البدیر حفظہ اللہ (امام وخطیب مسجد نبوی)   کے مرتب کردہ مجموعۂ احادیث  بعنوان بلوغ السعادة من أدلة توحيد العبادة کا اردو ترجمہ ہے۔شیخ موصوف نے  کئی  سال کی مسلسل  تحقیق  ومحنت کے بعد اسے  مرتب کیا ہے اوربڑی عرق ریزی سے  اس کتاب  میں  توحید کے اہم ترین موضوع پر   تقریباً بارہ صد صحیح احادیث جمع کردی ہیں ۔قارئین  کی  سہولت کےلیے ضروری مقامات پر احادیث کی شرح بھی  کی نیز قارئین کے ذہنوں میں پیدا ہونے والے سوالات کے جوابات بھی  تحریر کیے ہیں۔یہ کتاب توحید کے موضوع پر حدیث کا عظیم الشان انسائیکلوپیڈیا ، عقیدۂ توحید اور ایمانیات کا شاہکار ہے۔ خطباءاساتذہ،طلبہ، اور باذوق عوام کےلیے انمول تحفہ ہے۔اس کتاب کی افادیت کے پیش نظر جامعہ بلال اسلامیہ،لاہور نے اس  کا ترجمہ کروا کر  افادہ عام کےلیے اسے  مفت تقسیم کیا ہے۔اللہ تعالیٰ  مصنف ،مترجم  وناشرین کی اس کاوش کو قبول فرمائے اور اسے عامۃ الناس کےلیےنفع بخش بنائے ۔ آمین(م۔ا)

عناوین

صفحہ نمبر

عرض ناشر

17

عرض مولف

22

توحید عین فطرت ہے

25

رسولوں کی بعثت کا مقصد ہی توحید ہے

29

صرف اللہ تعالیٰ ہی عبادت کا مستحق ہے

33

ارادہ شرعیہ کی حقیقت

38

توحید ہی سب سے بڑی نیکی ہے

40

توحید کی نصیحت و تاکید

45

توحید کی خصوصی بیعت

47

عمل کی قبولیت اور آخرت میں اس کے نفع بخش ہونے کے لیے توحید شرط لازم ہے

52

صرف اہل توحید ہی امن اور ہدایت کے حق دار ہیں

56

رسول اللہ ﷺ کی شفاعت صرف اہل توحید کو نصیب ہو گی

58

توحید پر خاتمہ جنت کی ضمانت ہے

60

درجات کی کمی بیشی کا دارومدار توحید کی کمی بیشی پر ہے

63

احسان کیا ہے

66

گناہ گار موحدین

68

توحید کی دعوت دینا فرض عین ہے

76

دعوت وتبلیغ کا آغاز

80

دعوت الی اللہ کے لیے نرمی سے گفتگو کرنی چاہیے

83

مشرکوں اور اہل کتاب کو کس طرح سلام کرنا چاہیے

89

مشرک سے تحائف کے تبادلے کا جواز

91

مشرکین کے لیے استغفار کرنا منع ہے

95

مشرک کے لیے ہدایت کی دعا کرنا

99

مشرکین کے لیے بددعا کرنے کا بیان

101

شرک سب سے بڑا گناہ ہے

107

شرک کرنے والے کے عمل برباد ہو جاتے ہیں

109

شرک دائمی طور پر ناقابل معافی جرم ہے

111

مشرک کی توبہ قبول ہونے اور اسلام لانے کے بعد اس کے سابقہ اعمال کا معاملہ

114

مشرک کبھی جنت میں داخل نہیں ہو گا

116

اہل فترت مشرکین کی اولاد اور دیگر ایسے لوگوں کا حکم

120

عقیدے کے مسائل میں جہالت کی شرعی حیثیت

125

شرک کی مختلف صورتیں

132

شرک سے بچنا باعث مغفرت ہے

135

لوگوں کو شرک کی دعوت دینے والوں کی مذمت

139

کلمہ توحید کے اقرار تک لوگوں سے جہاد کرنے کا حکم

143

لاالہ الا اللہ کی شرط لازمی

151

اللہ تعالیٰ کے سوا سب کی عبادت کے انکار کے بغیر توحید معتبر نہیں ہوتی

158

ظاہری عمل پر حکم لگانا اور باطن اللہ کے سپرد کرنا ضروری ہے

160

اللہ تعالیٰ کی محبت اور اس کے لوازم کا وجوب

162

اللہ تعالیٰ کا خوف اور اس کے تقاضے

166

اللہ تعالیٰ پر توکل اور اسباب اختیار کرنے کا بیان

172

مخلوق کی ایسی اطاعت حرام ہے جس سے خالق کی نافرمانی ہو

174

اطاعت اور اتباع رسول ﷺ کے تقاضے

178

کتاب وسنت کو لازم پکڑنے اور اسے رشد و ہدایت کی راہ سمجھنے کا وجوب

182

فروعات و عقائد میں خبر واحد حجت ہے

185

توحید باری تعالیٰ کی معرفت

188

بدعت کی مذمت

190

خواہش پرستوں کی صحبت سے بچنا چاہیے

197

مشرک کا موحد سے بحث وجدال اور اس کی مذمت

200

دین میں غلو اور شدت پسندی ممنوع و مذموم ہے

203

نیت اور عزم و ارادہ کی اہمیت

208

اخلاص کی فضیلت

211

ریکاری سے ڈرنے اور اس کے شرک ہونے کی وضاحت

213

جو کام نہ کیا ہو اس کا کریڈٹ لینے کی مذمت

218

چھپ کر عبادت کرنے کی فضیلت

220

ثواب کی نیت سے کیا گیا عمل ہی باعث اجر ہے

223

خود پسندی

226

اخلاص سے عمل کرنے والا مومن

230

اللہ تعالیٰ سے اچھا گمان رکھنا ضروری ہے

232

نماز میں دکھلاوے اور شرک سے بچنا ضروری ہے

235

اللہ تعالیٰ کے حضور سجدہ نہ کرنے کی سزا

240

نیکی کی طرف اٹھنے والے قدموں کے نشانات پر بھی اجر ہے

242

اذان دینے کی اجرت کا مسئلہ

244

مقابلہ بازی اور شہرت کے لیے مساجد بنانے کی حرمت کا بیان

245

تلبیہ توحید کی عظمت و فضیلت

250

دنیا کی خاطر اور دنیا و آخرت دونوں کی خاطر جہاد کرنے والے کا بیان

262

کون سا جہاد اللہ تعالیٰ کے لیے ہے

266

صرف اللہ تعالیٰ کے لیے گناہ چھوڑنے کا اجر و ثواب

268

دولت کے پجاری کی پہچان

271

بتوں اور مورتوں کی عبادت منع ہے

277

بتوں اور مورتیوں کو توڑنا واجب ہے

284

صلیب لٹکانا حرام اوراسے توڑنا ضروری ہے

287

جاندار کی تصویر کی حرمت اور اسے مٹانے کا حکم

290

آخری زمانے میں بتوں کی پوجا

301

قبروں کو پختہ کرنے اور ان پر قبے بنانے کی ممانعت

307

عورتوں کو قبرستان جانے کی اجازت دینے والوں کے دلائل

311

مرنے والے زندہ لوگوں کی بات نہیں سن سکتے

315

فوت شدہ لوگ خودزندہ لوگوں کی دعاؤں کے محتاج ہیں

320

مردوں کو زندہ لوگوں کے اعمال سے نفع پہنچنے کا بیان

322

غیر اللہ کے لیے نذر و نیاز کا بیان

326

غیر اللہ کے نام پر ذبح کرنا حرام اور شرک ہے

332

دعا ہی اصل عبادت ہے اور غیر اللہ سے دعا کرنا شرک ہے

340

اللہ تعالیٰ سے پورے یقین کے ساتھ مانگنا چاہیے

351

خبر دینا مقصود ہو تو دعا میں ان شاء اللہ کہنا جائز ہے

353

جو شخص اللہ تعالیٰ کا واسطہ دے کر مانگے اسے کچھ نہ کچھ ضرور دینا چاہیے

365

صحیح اور فاسد تاویل میں فرق

395

غیب کا علم صرف اللہ تعالیٰ کو ہے

401

السلام علی اللہ کہنا منع ہے

418

زرعت کہنا منع ہے

419

کسی کو طبیب کہنے کا عدم جواز

421

قبلہ رخ تھوکنے سے اللہ تعالیٰ کو اذیت ہوتی ہے

424

اعمال صالحہ کا وسیلہ پکڑنا مسنون ہے

434

نیک آدمی سے دعا کرانے کا وسیلہ جائز ہے

438

اللہ تعالیٰ کو مخلوق کے سامنے سفارشی کے طور پر پیش کرنا منع ہے

446

اللہ تعالیٰ کے سوا کسی اور کی قسم اٹھانا حرام اور شرک ہے

448

غیر اللہ کی قسم اٹھانے کو جائز یا صرف مکروہ قرار دینے کی دلیل

451

اہل کتاب سے قسم لینے کا طریقہ

458

قسموں کی حفاظت کرنا

464

غیر اللہ کو سجدہ کرنا حرام ہے

469

تبرک کی جائز صورتیں

478

تبرک کی ناجائز صورتیں

484

شفا صرف اللہ تعالیٰ دیتا ہے

490

جھاڑ پھونک کا بیان

491

دم کے کلمات علمائے حق سے پوچھے جائیں

495

مسنون وظائف

501

جس نے جادو کیا اس نے شرک کیا

510

علم نجوم کی ممانعت

524

اچھا شگون لینا جائز ہے

540

موت کے اعلان کا بیان

560

مرثیہ خوانی کی حیثیت

563

اللہ تعالیٰ کی نعمت کی ناشکری کفر ہے

571

شفاعت کا اثبات اور اس کی اقسام

576

اہل بیت رضی اللہ عنہم کی فضیلت

610

اختلاف کی مذمت

617

کفار سے مشابہت کی حرمت

628

نفاق اکبر کا بیان

636

نفاق اصغر کا بیان

639

خوارج اور ان کی خصلتیں

645

مسلمان حکمرانوں کے حقوق و فرائض

657

جہیمہ کی تردید

675

فرشتوں کا بیان

695

آسمانی کتابوں کا بیان

701

عذاب قبر اور اس کی نعمتوں کا بیان

707

حشر و نشر کا بیان

722

حساب کتاب اور بدلے کا بیان

727

حوض اور ترازو کا بیان

733

دوزخ کی ہولناکیاں

738

جنت کے نظارے

746

اس ناشر کی دیگر مطبوعات

ایڈ وانس سرچ

اعدادو شمار

  • آج کے قارئین 3073
  • اس ہفتے کے قارئین 8285
  • اس ماہ کے قارئین 67017
  • کل قارئین57730714

موضوعاتی فہرست