#1465

مصنف : پروفیسر ڈاکٹر عبد الرؤف ظفر

مشاہدات : 18408

بہائیت اور اس کے معتقدات

  • صفحات: 239
  • یونیکوڈ کنورژن کا خرچہ: 7170 (PKR)
(بدھ 25 جولائی 2012ء) ناشر : قرآنک عریبک فورم بہاول پور

انیسویں صدی میں جب کفار نے مسلم ممالک پر اپنا تسلط قائم کیا تو مسلمانوں کے جذبہ جہاد کو ختم کرنے کے لیے مختلف قسم کی سازشیں کیں ا ن میں سے ایک یہ تھی کہ اسلام میں نئے انبیا کا ظہور دعویٰ کیا جائے اور ان جھوٹے انبیا کے ذریعے سے نئے عقائد کا پرچار کیا جائے جن میں جہاد نام کی کوئی چیز باقی نہ ہو۔ ان نظریات کے حامی برصغیر میں مرزا غلام احمد قادیانی تھے اور ایران میں علی محمد باب اور پھر اس کی روحانی اولاد میں حسین علی مازندرانی بہاء اللہ اور اس کا بیٹا عباس عبدالبہاء آفندی پیدا ہوئے۔ ان فتنوں کےخلاف علمائے اسلام نے بہت خدمات انجام دیں اور شدو مد کے ساتھ ان کا رد پیش کیا۔ پیش نظر کتاب بھی اسی سلسلہ میں ترتیب دی گئی ہے جس میں بہائیت کے بانی بہاء اللہ کے عقائد  و نظریات پر اس کی کتابوں سے بحث کی گئی ہے اور اسلام کے نظریہ ختم نبوت اور جہاد پر مفصل کلام کیا گیا ہے اس  کے علاوہ اسلامی نظام زندگی کا خلاصہ بھی کتاب  میں شامل کیا گیاہے۔ (ع۔م)
 

عناوین

 

صفحہ نمبر

پیش لفظ

 

1

باب اول۔بہائیت کا پس منظر ومختصر تاریخ

 

13

باب دوم۔بہاء اللہ مازند رانی کے باطل عقائد ودعاوی

 

43

باب سوم۔بہائیت کی تعلیمات پر ایک نظر

 

54

باب چہارم۔بہائی شریعت

 

84

باب پنجم۔بہائیت کے جھوٹ اور پشین گوئیاں

 

102

باب ششم۔بہائیت کے زعماء اور فرقے

 

110

باب ہفتم۔ختم نبوت

 

122

باب ہشتم۔ اسلام کا تصور جہاد اور بہائیت

 

184

باب نہم۔ اسلام ایک مکمل نظام حیات

 

233

مصادر ومراجع

 

277

 

ایڈ وانس سرچ

اعدادو شمار

  • آج کے قارئین 1020
  • اس ہفتے کے قارئین 9368
  • اس ماہ کے قارئین 68100
  • کل قارئین57733004

موضوعاتی فہرست