#4666

مصنف : ڈاکٹر محمد بن عبد الرحمٰن العریفی

مشاہدات : 3104

دنیا کا خاتمہ

  • صفحات: 325
  • یونیکوڈ کنورژن کا خرچہ: 13000 (PKR)
(منگل 24 مئی 2016ء) ناشر : مکتبہ بیت السلام الریاض

وقوع  قیامت کا  عقیدہ اسلام کےبنیادی عقائد میں سےہے اور ایک مسلمان کے ایمان کا حصہ ہے۔  قیامت آثار  قیامت کو  نبی کریم  ﷺ نے احادیث میں  وضاحت کے ساتھ بیان کیا ہے  جیساکہ احادیث میں  میں ہے کہ قیامت اس وقت تک قائم نہ ہو گی جب تک عیسیٰ بن مریم﷤ نازل نہ ہوں گے۔ وہ دجال اورخنزیر کو قتل کریں گے۔ صلیب کو توڑیں گے۔ مال عام ہو جائے گا اور جزیہ کو ساقط کر دیں گے اور اسلام کے علاوہ کوئی اور دین قبول نہ کیا جائے گا۔ آپ کے زمانہ میں اللہ تعالیٰ اسلام کے سوا سب ادیان کو ختم کر دے گا اور سجدہ صرف اللہ تعالیٰ کے لیے ہوگا۔ اس سے واضح ہوتا ہے کہ عیسٰی﷤ کے زمانہ میں تمام روئے زمین پر اسلام کی حکمرانی ہوگی اور اس کے علاوہ کوئی دین باقی نہ رہے گا۔علامات قیامت کے حوالے  سے ائمہ محدثین نے  کتب احادیث میں ابواب بندی بھی کی  ہے اوربعض  اہل علم نے اس موضوع پر  کتب  لکھی ہیں۔ زیر تبصرہ کتاب ’’دنیا کاخاتمہ‘‘ سعودی عرب کے مایہ ناز عالم دین ڈاکٹر محمدبن عبد الرحمٰن العریفی﷾ کی عربی کتاب ’’نہایۃ العالم اشراط الساعۃ الصغریٰ واالکبریٰ مع صور و خرائط و توضیحات‘‘  کا آسان اردو ترجمہ ہے۔ یہ کتاب علامات قیامت کے متعلق پہلی تصویری کتاب ہے جس میں قرآن و احادیث کی روشنی میں ان تمام سوالات کے جوابات موجود ہیں جن کے متعلق آج کل خبریں یا کتابیں چھپ چکی ہیں۔ان کتابوں میں ہر مصنف نے اپنے ہی نظریے کو سچ ثابت کرنے کے لیے دلائل دیے ہیں۔ لیکن اس کتاب میں مصنف نے اپنی کوئی بات بھی پیش نہیں کی ہر خبر کے آثار قرآن و حدیث سے اخذ کیے ہیں۔ مصنف نے کتاب کو دو حصوں میں تقسیم کیا ہے۔ پہلے حصے میں قیامت کی 131 چھوٹی علامات اور دوسرے حصے میں 10 بڑی علامات قیامت بیان کی ہیں۔ ہر موضوع سے پہلے خصوصی تحریر’’کچھ اس باب سے متعلق‘‘ کے عنوان سےلکھی ہے۔ جس سے قاری کے ذہن میں موجود سوالات اور موضوع سےمتعلق پیچیدگی کو آسان بنایا گیا ہے۔ اور ہر موضوع کی مناسبت سے پر ذوق تصاویر کا انتخاب کیاگیا ہے۔ مختلف رنگوں کی مدد سے حدیث رسول ﷺ، صحابہ ائمہ کےاقوال، قرآنی آیات کے تراجم اور حوالہ جات کی الگ الگ نشان دہی کردی گئی ہے۔ یہ کتا ب اپنی علمی پختگی کی وجہ سے بہت جلد مقبول ہوئی اور عربی زبان میں اس کے کئی ایڈیشن شائع ہوئے لاکھوں نسخے چند مہینوں میں فروخت ہوگئے۔اسی وجہ سے اردو داں طبقہ کے لیے جناب شیخ شفیق الرحمٰن الدراوی ﷾ نے اس انداز میں اس کتاب کو اردو قالب میں ڈھالا ہےکہ ترجمے کی روانی اور سلاست نے اصل کتاب کی اساس کو برقرار رکھا ہے۔ کتاب کے فاضل مصنف ڈاکٹر عبد الرحمن العریفی﷾ سعودی عرب کے دار الحکومت الریاض کے باشندے ہیں اور وہیں ایک معروف یونیورسٹی کے شعبہ تدریس سے وابستہ ہیں۔دعوت دین کے حلقوں میں ان کا نام جانا پہچانا ہے۔ دعوتِ دین کے میدان میں اُن کی مساعی جمیلہ کو قدر کی نگاہ سے دیکھا جاتا ہے اُن کا شمار علامہ ابن باز کے ممتاز شاگردوں میں ہوتا ہے۔ دیار ِعرب میں ان کی خطابت کا بھی بہت شہرہ ہے۔ ان کی متعدد کتابیں خاصی پذیرائی حاصل کرچکی ہیں جن میں ان کی شہرۂ آفاق کتاب ’’زندگی سے لطف اٹھائیے‘‘ سرفہرست ہے۔ (م۔ا)

عناوین

صفحہ نمبر

اس کتاب میں کیا خاص ہے

3

مقدمہ

5

قیامت کی نشانیوں پر بحث کیوں کرتے ہیں

7

قیامت کوپیش آمدہ واقعات پر منظبق کرنے  کے قواعد

11

قیامت کی نشانیوں کوواقعات پر منطبق کرنے کےقواعد

16

علامت قیامت کی اقسا م

23

قیامت کی چھوٹی علامات

 

رسول اکرم ﷺ کی بعثت

36

رسول اکرم ﷺ کی وفات

37

چاند کادوٹکڑے ہونا

38

صحابہ کرام ﷢ (کےدور )کاگزرنا

40

بیت المقدس کی فتح

41

بکریوں کی قعاص جیسی بیماری سے لوگوں کی بکثرت موت

42

مختلف انواع کے فتنوں کی کثرت

43

فضائی اانواع کے فتنوں کی کثرت

43

فضائی چینلر کاظہور

45

آپﷺ کاصفین کےبارے میں خبر دینا

46

خوارج کاظہور

47

جھوٹی نبوت کےدعویداروں (دجالوں )کا ظہور

51

امن وامان اورفراختگی کاپھیل جانا

56

حجاز سے آگ کاظاہر ہونا

57

ترکوں سے جنگ

58

ظالموں کاظہور جولوگو ں کوکوڑوں سے ماریں گے

60

قتل وغارت کی کثرت

61

امانت  کاضائع ہوجانا اوردلوں سے اس کااٹھ جانا

62

سابقہ امتوں کااتباع

64

لونڈی کااپنے آقا کوجنم دینا

66

لباس پہنے ہوئے مگر ننگی عورتیں

66

ننگے پاؤں اورننگے سرچلنے والوں کابڑی عمارتوں کی تعمیر میں فخر کرنا

67

صرف خاص لوگوں کو سلام کرنا

69

تجارت کاعام ہوجانا

70

عورت کااپنے  شوہر کےساتھ تجارت میں شریک ہونا

70

بعض تاجروں کابازاروں پر راج ہونا

70

جھوٹی گواہی

72

سچی گواہی چھپانا

73

جہالت کاپھیل جانا

74

بخل اورخود غرضی کاعام ہوجانا

76

قطع رحمی

76

ہمسائے سے براسلوک

76

فحاشی کاظہور

77

امین کوخائن اورخائن کو امین بنانا

78

شریف لوگوں کی ہلاکت اورگھٹیا لوگوں کاغلبہ

78

مال کےحلال وحرام کی پرواہ نہ کرنا

79

مال فے کواپنی دولت سمجھنا

81

امانت کوغنیمت سمجھنا

81

زکوۃ کوتاوان سمجھنا

82

غیراللہ کےلیے علم حاصل کرنا

82

بیوی کی اطاعت اورماں کی نافرمانی

83

دوست کی قربت اوروالد سے دوری

84

مساجد میں شور وشرابا

85

قبائل پر فاسق لوگوں کی قیادت

85

قوم کےسب سے گھٹیاانسان کابڑا بن جانا

96

کسی شخص کےشرسے بچنے کےلیے اس کی عزت کرنا

86

لونڈیوں کو حلال سمجھنا

87

ریشم کوحلال سمجھنا

87

شراب کو حلال سمجھنا

87

گانے بجانے کے آلات کوحلال سمجھنا

87

لوگوں کاموت کی تمنا کرنا

90

ایساوقت آنا کہ انسان صبح کومومن او رشام کو کافر ہو

91

مساجد میں نقش ونگار اور ان کی بناوٹ پر فخر کرنا

92

گھروں میں نقش ونگار اوزیب وزینت

94

قرب قیامت میں آسمانی بجلی کی کثرت

95

کتابت (کتابوں )کی کثرت اورانتشار

96

چرب زبانی اوردرغ گوئی سے مال کمانا

97

قرآن کےعلاوہ باقی کتابوں کاعام ہوجانا

99

ایسازمانہ جب پڑھنے والے زیادہ ہوں گے علماء اوفقہاء کم ہوں گے

99

چھوٹے لوگوں کے پاس علم تلاش کرنا

101

اچانک موت کابڑھجانا

103

بیوقوف لوگوں کی امارت

104

زمانے کاقرب ہوجانا

106

چھوٹے سروالوں (بیوقوفوں )کلام کرنا

107

سب سے گھٹیا انسان کاسب سے خوش قسمت ہوجانا

108

مسجدوں کو راہدرای بنالینا

109

مہر کابڑھ جانا اورپھر کم ہونا

110

گھوڑوں کی قیمت کابڑھنا اورپھر کم ہوجانا

110

بازروں کاقریب قریب ہوجانا

111

اقوام عالم کامسلمانوں پر ٹوٹ پڑھنا

112

لوگوں کاامامت کےلیے ایک دوسرے کو آگےکرنا

114

مومن کاسچے خواب دیکھنا

115

جھوٹ کی کثرت

117

لوگوں میں بیگانگی کاپھیل جانا

118

زلزلوں کی کثرت

119

عورتوں کی کثرت

120

مردوں کاکم ہوجانا

120

فحاشی کاعام اوراعلانیہ ارتکاب

122

قرآن پڑھنے پر اجرت لینا

123

لوگوں میں موٹاپے کی کثرت

124

لوگوں کابلاطلب گواہی پرتیار رہنا

125

لوگ منتیں مانیں گے مگر انہیں پورا نہیں کریں گے

125

طاقتور کاکمزور کوکھاجانا

126

کتاب اللہ کےمطابق فیصلے کو ترک کرنا

127

اہل روم کی کثرت اوراہل عرب کی قلت

128

وہ علاما ت جووقوع پذیر نہیں ہوئیں

 

مال کابہہ پڑنا اوروافرمقدار میں ہونا

130

زمین اپنے خزانے اگل دینا

132

شکلیں بگڑنے کی وقعات کاپیش آنا

133

زمین کادھنسنا

133

آسمانوں سے پتھر برسنا

133

تباہ کن بارشیں

135

بارشوں کےباوجود زمین کچھ بھی نہیں اگائے گی

136

تمام عربوں کو ہلاک کرنے ولا فتنہ

137

درختوں کاگفتگو کرنا

138

پتھر کامسلمانوں کی مدد کےلیے گفتگو کرنا

138

مسلمانوں کی یہودیوں کوقتل کرنا

138

دریائے فرات سے سونے کاپہاڑ ظاہر ہونا

140

ایسازمانہ آنا جب انسان کو گناہ یاعاجزی کےاظہار کےلیے اختیار دیاجائے گا

142

جزیرہ عرب میں سرسبز شاہ دابی ارو دریاؤں کاپلٹ آنا

143

احلاس (بھاگنے )کےفتنے کاظہور

146

نعمتوں کے فتنے کاظہور

146

مسلسل برقرار رہنے ولاسیاہ ترین فتنہ

146

جب ایک سجدہ دنیا ومافیہا کے برابر ہوگا

148

پہلی رات کےچاند کامعمول سے بڑا نظر آنا

149

لوگوں کاملک شام کی طرف ہجرت کرنا

151

مسلمانوں اورعیسائیوں کےمابین خونر یز جنگ

153

قسطنیطہ کی فتح

153

میراث تقسیم نہیں کی جائے گی

159

لوگوں کوغنیمت پر کوئی خوشی نہیں ہوگی

159

پرانی سواریوں ارواسلحہ کی طرف پلٹ جانا

159

بیت المقدس کی آباد دکاری

160

مدینہ کی ویرانی اور اس کااہل مدینہ اورزائرین سےخالی ہوجانا

160

مدینہ کابر سے لوگو ں کونکال دینا

162

پہاڑوں کاابنی جگہ سے ہٹ جانا

164

قحطانی کاظہور لوگ جس کی پیروی کریں گے

166

حجباہ نامی آدمی کاظہور

167

درندوں اورجمادات کاگفتگوکرنا

167

لاٹھی (کوڑے )کاایک کونابات کرےگا

167

جوتے کاتسمہ بات کرےگا

167

انسان کی ران اس کےگھر ولوں کوخبر دےگی

167

اسلام ختم ہونےتک قیامت قائم نہیں ہوگی

170

قرآن صحیفوں اوردلوں سے اٹھا لیاجائے گا

170

بیت اللہ پر حملہ آور لشکر کازمین میں دھنسنا

172

بیت اللہ  کاحج ترک دینا

174

بعض عر ب قبیلوں کابتوں کی پوجا لوٹ جانا

175

قریشی قبیلے کاختم ہوجانا

176

ایک حبشی کےہاتھوں خانہ کعبہ کی تباحی

177

مومنین کی ردحیں قبض کرنےکےلیے پاکیزہ ہوا کاچلنا

180

مکہ مکرمہ میں بلند وبالا بلڈ نگیں

181

امت کےآخری لوگوں کاپہلوں پر لعنت کرنا

182

سفر کےنئے  سازوسامان (گاڑایوں وغیرہ )کاعام ہونا

183

امام مہدی کاظہور

184

قیامت کی بڑی نشانیاں

 

مسیح دجال کاظہور

213

عیسی ﷤کانزول

265

یاجوج ماجوج کاخروج

303

تین گرہن

329

دھواں

337

چوپایہ

345

سورج کامغرب سے طلوع ہونا

353

وہ آگ جولوگوں کوحشر کیطرف ہانکے گی

359

خاتمہ

365

دنیاکاخاتمہ

366

قیامت کی 131چھوٹی نشانیاں

367

 

 

آپ کے براؤزر میں پی ڈی ایف کا کوئی پلگن مجود نہیں. اس کے بجاے آپ یہاں کلک کر کے پی ڈی ایف ڈونلوڈ کر سکتے ہیں.

اس مصنف کی دیگر تصانیف

اس ناشر کی دیگر مطبوعات

ایڈ وانس سرچ

اعدادو شمار

  • آج کے قارئین 2198
  • اس ہفتے کے قارئین 11118
  • اس ماہ کے قارئین 66307
  • کل قارئین52968660

موضوعاتی فہرست