خواتین کے امتیازی مسائل(3708#)

حافظ صلاح الدین یوسف
دار السلام، لاہور
421
14735 (PKR)

اللہ تعالی نے عورت کو معظم بنایا لیکن جاہل انسانوں نےاسے لہب ولعب کاکھلونا بنا دیا اس کی بدترین توہین کی اور اس پر ظلم وستم کی انتہا کردی تاریخ کے اوراق سے پتہ چلتاہے کہ ہر عہد میں عورت کیسے کیسے مصائب ومکروہات جھیلتی رہی اور کتنی بے دردی سے کیسی کیسی پستیوں میں پھینک دی گئی لیکن جب اسلام کا ابرِ رحمت برسا توعورت کی حیثیت یکدم بدل گئی ۔محسن انسانیت جناب رسول اللہ ﷺ نے انسانی سماج پر احسان ِعظیم فرمایا عورتوں کو ظلم ،بے حیائی ، رسوائی اور تباہی کے گڑھے سے نکالا انہیں تحفظ بخشا ان کے حقوق اجاگر کیے ماں،بہن، بیوی اور بیٹی کی حیثیت سےان کےفرائض بتلائے اورانہیں شمع خانہ بناکر عزت واحترام کی سب سےاونچی مسند پر فائز کردیااور عورت و مرد کے شرعی احکامات کو تفصیل سے بیان کردیا ۔اور چودہ صدیاں پہلے خاتم النبیین ﷺ نےعورتوں کے حقوق اوراحترام کے تحفظ کا جو چارٹر عطا، اس کےبغیر ہم ان کے سماجی اورمعاشرتی ربتے میں اضافہ نہیں کرسکتے۔ شریعت نے عورتوں کی صنفی اورمعاشرتی حیثیت کی مناسبت سےان کےجو امتیازی مسائل بیان کیے ہیں۔ ان میں بہت سے حکمتیں اور فوائد شامل ہیں۔ زیر تبصرہ کتاب ’’خواتین کے امتیازی مسائل‘‘ممتاز دینی مفکر مفسر قرآن محترم حافظ صلاح الدین یوسف﷾ کی تصنیف ہے۔عبادت، وراثت، شہادت اور نکاح وطلاق کے علاوہ دیگر مسائل پر عورتوں کےامتیازی حقوق کےسلسلے یہ بلند پایہ تحقیقی کتاب ہے۔ یہ کتاب ایک طرف اسلام کےمعاشرتی نظام میں عورت کی اہمیت اورعظمت پر روشنی ڈالتی ہے اوردوسری طرف ان کےمسائل پر شریعت کی حکمت وافادیت بھی واضح کرتی ہے۔ اس کےبرعکس مغربی تہذیب نے عورت کو جس طرح رُسوا کیا ہے وہ کوئی ڈھکی چھپی بات نہیں ۔ ہم سب کی فلاح اسلام کےدامن میں ہے ہمیں مغربی تہذیب کو یکسر خیر باد کہہ دینا چاہیے اوراسلام کی فلاحی تعلیمات کےمطابق زندگی بسر کرنی چاہیے۔ یہ کتاب اسی دعوت کی آئینہ دار ہے ۔اس کے مطالعہ وعمل سے ہماری محترم خواتین تعظیم وتکریم کی اونچی سے اونچی مسند پر فائز ہوسکتی ہیں ۔یہ کتاب اگرچہ پہلے بھی ویب سائٹ پر موجود تھی ۔لیکن اس ایڈیشن میں حافظ صاحب نے مزید اضافہ جات کیے ہیں اس لیے اسے بھی پبلش کردیا گیا ہے۔ اللہ تعالیٰ حافظ کو صحت وعافیت سے نوازے اوران کی تحقیقی وتصنیفی، صحافتی اوردعوتی خدمات کو شرفِ قبولیت بخشے (آمین)( م۔ا)

عناوین

صفحہ نمبر

عرض ناشر

18

عرض مؤلف

22

اسلام میں عورت کا مقام (مقدمہ)

25

عورت کے شرف و وقار کے تحفظ کے لیے اسلامی تعلیمات کا خلاصہ

25

شادی سے قبل اور شادی کے بعد

33

مرد اور عورت کے دائرہ کار کا اختلاف

36

مرد اور عورت کے درمیان چند بنیادی فرق

39

معاشی کفالت کا ذمے دار اور خاندان کا سربراہ

39

عورت کے لیے پردے کا حکم

40

وراثت میں عورت کا نصف حصہ

45

مرد کو ایک سے زیادہ چار تک شادی کرنے کی اجازت

46

مرد کا حق طلاق اور اس کی حکمت

46

مسئلہ شہادت نسواں اور مرد و عورت کے درمیان فرق و اختلاف کی تین صورتیں

50

عورت، خانگی اور امور اور پرورش اولاد کی ذمہ دار

53

تربیت اولاد میں عورت کا کردار

53

عورت کے لیے پردے کا وجوب اور اس کے احکام و اداب

57

پردے کا حکم اور مردوں سے اختلاط کی ممانعت

57

بے پردگی پر سخت وعید اور اس کی مختلف شکلیں

58

تشریح و توضیح

59

حدیث میں وارد سخت وعید کی مصداق عورتیں

61

شادی بیاہ میں ویڈیو اور حسن و جمال کی نمائش کی وبا

61

پردے کا حکم اور اس کے آداب

62

کن کن لوگوں سے پردہ ضروری اور اختلاط (میل جول) منع ہے

63

محارم کی وضاحت جن سے پردہ ضروری نہیں

67

مثالی مسلمان عورت کی صفات

67

عورت کے لیے اختیار کرنے والے اہم کام

68

وہ کام جن سے اجتناب کرنا عورت کے لیے ضروری ہے

69

عورت اور تعلیم؟

71

لاکھوں بے روزگار مردوں کی موجودگی میں عورتوں کی ملازمت کا کوئی جواز نہیں

72

عورت اور ملازمت

74

خاوند کی ناشکری، ایک بڑا جرم اور اس کا نبوی حل

79

رہن سہن میں ناز و نعمت کی بجائے تواضع اور سادگی پسندیدہ ہے

83

خواتین کی تعلیم اور ملازمت کا مسئلہ

88

قوم کی نصف آبادی بیکار افسانہ یا حقیقت

92

عورت اور سیاست؟

96

ضلعی حکومتوں کے نئے نظام میں عورتوں کی نمائندگی

102

ایک اور شوق فضول اور مغرب زدگی کا شاخسانہ

102

مسلمان خواتین کے حل طلب ضروری مسائل کی ایک فہرست

103

عورت اور اس کی سربارہی

108

ہم شرمندہ ہیں

111

سیاست میں عورت کا کردار

114

جنگ جمل میں حضرت عائشہؓ کے کردار سے استدلال

115

قرآن کریم میں ملکہ بلقیس کے ذکر سے استدلال

118

قرآن کریم سے ملوکیت کا جواز ہی نہیں، استحسان ثابت ہے

121

قرآن کریم میں عورت کی سربراہی کے عدم جواز کے دلائل

123

فارس کی حکمران عورت کا نام بوران دخت بنت کسریٰ ہے

124

مولانا مودوی مرحوم کے سیاسی موقف سے استدلال

126

ایک اور عبرت آموز اور دلچسپ لطیفہ

128

ایک باخبر صحافی کی طف سے توضیح مزید

129

اس مصنف کی دیگر تصانیف

اس ناشر کی دیگر مطبوعات

ایڈوانس سرچ

اعدادو شمار

  • آج کے قارئین: 1172
  • اس ہفتے کے قارئین: 7341
  • اس ماہ کے قارئین: 46909
  • کل قارئین : 47267837

موضوعاتی فہرست

ای میل سبسکرپشن

محدث لائبریری کی اپ ڈیٹس بذریعہ ای میل وصول کرنے کے لئے ای میل درج کر کے سبسکرائب کے بٹن پر کلک کیجئے۔

رجسٹرڈ اراکین

ایڈریس

        99--جے ماڈل ٹاؤن،
        نزد کلمہ چوک،
        لاہور، 54700 پاکستان

       0092-42-35866396، 35866476، 35839404

       0092-423-5836016، 5837311

       library@mohaddis.com

       بنک تفصیلات کے لیے یہاں کلک کریں