#3478.01

مصنف : علامہ شبلی نعمانی

مشاہدات : 3732

سیرۃ النبی ﷺ از شبلی ( تخریج شدہ ایڈیشن ) حصہ 2

  • صفحات: 316
  • یونیکوڈ کنورژن کا خرچہ: 7900 (PKR)
(اتوار 16 اگست 2015ء) ناشر : مکتبہ اسلامیہ، لاہور

اس روئے ارض پر انسانی ہدایت کے لیے حق تعالیٰ نے جن برگزیدہ بندوں کو منتخب فرمایا ہم انہیں انبیاء ورسل﷩ کی مقدس اصطلاح سے یاد کرتے ہیں اس کائنات کے انسانِ اول اور پیغمبرِاول ایک ہی شخصیت حضرت آدم کی صورت میں فریضۂ ہدایت کےلیے مبعوث ہوئے ۔ اور پھر یہ کاروانِ رسالت مختلف صدیوں اور مختلف علاقوں میں انسانی ہدایت کے فریضے ادا کرتے ہوئے پاکیزہ سیرتوں کی ایک کہکشاں ہمارے سامنے منور کردیتاہے ۔درخشندگی اور تابندگی کے اس ماحول میں ایک شخصیت خورشید جہاں تاب کی صورت میں زمانےاور زمین کی ظلمتوں کو مٹانے اورانسان کےلیے ہدایت کا آخری پیغام لے کر مبعوث ہوئی جسے محمد رسول اللہ ﷺ کہتے ہیں ۔ آج انسانیت کےپاس آسمانی ہدایت کا یہی ایک نمونہ باقی ہے۔ جسے قرآن مجید نےاسوۂ حسنہ قراردیا اور اس اسوۂ حسنہ کےحامل کی سیرت سراج منیر بن کر ظلمت کدۂ عالم میں روشنی پھیلارہی ہے ۔حضرت محمد ﷺ ہی اللہ تعالیٰ کے بعد ،وہ کامل ترین ہستی ہیں جن کی زندگی اپنے اندر عالمِ انسانیت کی مکمل رہنمائی کا پور سامان رکھتی ہے ۔ ۔ شروع ہی سے رسول کریم ﷺکی سیرت طیبہ پر بے شمار کتابیں لکھیں جا رہی رہیں۔یہ ہر دلعزیز سیرتِ سرورِ کائنات کا موضوع گلشنِ سدابہار کی طرح ہے ۔جسے شاعرِ اسلام سیدنا حسان بن ثابت سے لے کر آج تک پوری اسلامی تاریخ میں آپ ﷺ کی سیرت طیبہ کے جملہ گوشوں پر مسلسل کہااور لکھا گیا ہے او رمستقبل میں لکھا جاتا رہے گا۔اس کے باوجود یہ موضوع اتنا وسیع اور طویل ہے کہ اس پر مزید لکھنے کاتقاضا اور داعیہ موجود رہے گا۔ گزشتہ چودہ صدیوں میں اس ہادئ کامل ﷺ کی سیرت وصورت پر ہزاروں کتابیں اورلاکھوں مضامین لکھے جا چکے ہیں ۔اورکئی ادارے صرف سیرت نگاری پر کام کرنے کےلیےمعرض وجود میں آئے ۔اور پورے عالمِ اسلام میں سیرت النبی ﷺ کے مختلف گوشوں پر سالانہ کانفرنسوں اور سیمینار کا انعقاد کیا جاتاہے جس میں مختلف اہل علم اپنے تحریری مقالات پیش کرتے ہیں۔ ہنوذ یہ سلسلہ جاری وساری ہے ۔ اردو زبان میں سرت النبی از شبلی نعمانی ،سیدسلیمان ندوی رحمہما اللہ ، رحمۃللعالمین از قاضی سلیمان منصور پوری اور مقابلہ سیرت نویسی میں دنیا بھر میں اول آنے والی کتاب الرحیق المختوم از مولانا صفی الرحمن مبارکپوری کو بہت قبول عام حاصل ہوا۔ زیر تبصرہ کتاب ’’سیرت النبی ﷺ‘‘ برصغیر پاک وہند میں سیرت کےعنوان مشہور ومعروف کتاب ہے جسے علامہ شبلی نعمانی﷫ نے شروع کیا لیکن تکمیل سے قبل سے اپنے خالق حقیقی سے جاملے تو پھر علامہ سید سلیمان ندوی ﷫ نے مکمل کیا ہے ۔ یہ کتاب محسن ِ انسانیت کی سیرت پر نفرد اسلوب کی حامل ایک جامع کتاب ہے ۔ اس کتاب کی مقبولیت اور افادیت کے پیش نظر پاک وہند کے کئی ناشرین نےاسے شائع کیا ۔زیر تبصرہ نسخہ ’’مکتبہ اسلامیہ،لاہور ‘‘ کا طبع شدہ ہے اس اشاعت میں درج ذیل امور کا خاص خیال رکھا گیا ہے۔قدیم نسخوں سےتقابل وموازنہ ، آیات قرآنیہ ، احادیث اورروایات کی مکمل تخریج،آیات واحادیث کی عبارت کو خاص طور پرنمایاں کیا ہے ۔نیز اس اشاعت میں ضیاء الدین اصلاحی کی اضافی توضیحات وتشریحات کےآخر میں (ض) لکھ واضح کر دیا ہے ۔تاکہ قارئین کوکسی دقت کا سامنا نہ کرنا پڑے ۔علاوہ ازیں اس نسخہ کو ظاہر ی وباطنی حسن کا اعلیٰ شاہکار بنانے کی بھر پور کوشش کی گئی ہے۔اور کتاب کی تخریج وتصحیح ڈاکٹر محمد طیب،پرو فیسر حافظ محمد اصغر ، فضیلۃ الشیخ عمر دارز اور فضیلۃ الشیخ محمد ارشد کمال حفظہم اللہ نےبڑی محنت سے کی ہے ۔اللہ تعالیٰ اس کتاب کی طباعت میں تمام احباب کی محنت کو قبول فرمائے اور ان کےلیے نجات کا ذریعہ بنائے (آمین) (م۔ا)

دیباچہ سیرت بنو یﷺمجلد دوم

 

413

۹۔۱۰۔۱۱ھ اسلام کی امن کی زندگی

 

415

عرب کی عام بد امنی

 

415

قیام امن

 

415

بیرونی خطرات

 

417

یہو دیو ں کی قوت

 

417

اسلام کے ذریعہ عرب کی شیرازہ بندی

 

418

قیام امن کی تد بیر

 

419

بیرونی خطرات کے انسداد کا سامان

 

420

تبلیغ و اشاعت اسلام

 

413

طفیل بن عمرہ کا اسلام

 

423

عمرو بن عبسہ

 

432

ضماد بن ثعبلہ اور قبیلہ ازد کا اسلام

 

423

حضرت ابوذر کا اسلام

 

424

قبیلہ غفار کا اسلام

 

425

قبیلہ اسلم کا اسلام

 

425

اوس و خز ر ج کا اسلام

 

425

قیام مدینہ میں اشا عت اسلام

 

425

بدر کے بعض قر یشیوں کے اسلام

 

425

جبیر بن مطعم کے اسلام

 

426

پیشین گو ئی روم کا اثر

ٍ

426

قبیلہ مر ینہ کا اسلام

 

426

قبیلہ شجع کا اسلام

 

426

قبیلہ جہینہ کا اسلام

 

427

صلح حد یبیہ کا اثر

 

427

فتح مکہ کا اثر

 

427

دعات کا تقرر

 

428

چند محصلین زکو ۃ دعات

 

429

خا ص اشاعت اسلام کے دعات

 

430

روسائے قبائل دعات

 

430

مقامات د عوت

 

431

یمن

 

431

نجران

 

434

اہل یمن کے لیے دعا ئے خیر

 

434

بحرین

 

435

عمان

 

435

عرب شام

 

436

                                                  وفو د عرب

 

437

مزینہ

 

437

بنو تمیم

 

438

بنو سعد

 

439

اشعر یین

 

440

دوس

 

441

بنو حر ث بن کعب

 

441

قبیلہ طے

 

441

عدی بن خاتم

 

441

وفد ثقیف

 

442

وفد نجران

 

445

بنو اسد

 

446

بنو فزارہ

 

447

کندہ

 

447

عبد القیس

 

447

بنو عامر

 

448

حمیر وغیرہ کی سفارت

 

449

تاسیس حکومت الہیٰ

 

450

اسلامی حکومت کی غر ض و غا یت

 

450

انتظام ملکی

 

452

امیر العسکری

 

452

افتا

 

453

فصل قضا یا

 

453

توقیعات و فرامین

 

453

مہمان داری

 

454

عیادت مر ضی ٰ

 

455

احتساب

 

455

اصلاح بین الناس

 

456

کتاب

 

447

حکا  م اور ولاۃ

 

458

حکام کا امتحان

 

460

محصلین زکو ٰ ۃ و جزیہ

 

461

قضا ۃ

 

646

پو لیس

 

ٍ464

جلاد

 

464

غیر قو تو ں سے معا ہد ہ

 

464

ا صناف محا صل و مخارج

 

466

جا گیر یں اور ا فتا دہ زمینوں کی ا ٓ بادی

 

468

مذ ہبی انتظاما ت

 

470

دعاۃ ا ور م معلمین اسلام

 

470

ان کی تعلیم و تر بیت

 

471

مساجد کی تعمیر

 

473

ائمہ نماز کا تقرر

 

476

مو ذنین

 

478

                                             تاسیس و تکمیل شریعت

 

479

اسلام کے اکثر فرا ئض بہ تد ریج تکمیل کو پہنچتے ہیں

 

479

عقائد اور اسلام کے اصول اولین

 

481

عقائد

 

481

عبادات

 

484

طہارت

 

484

تمیم

 

485

نماز

 

486

نماز جمعہ اور عیدین

 

490

صلو ۃ خو ف

 

491

روزہ

 

492

حج

 

495

حج کے اصلاحات

 

496

                                                         معاملات

 

499

وراثت

 

499

وصیت

 

501

وقف

 

501

نکا ح و طلاق

 

502

حدود و تعزیرات

 

503

حلال و حرام

 

507ٍ

ما کو لات میں حلال و حرام

 

507

شراب کی حرمت

 

509

سود خواری کی حرمت

 

512

۱۰؁ ھ سال ا خیر ، حجتہ الو داع ، اختتام

 

 

فر ض نبو ت

 

515

حجتہ الودا ع

 

515

خطبہ نبو ی اور ا صول شر یعت کا اعلان عام

 

515

                                                       ۱۱؁ ھ وفات

 

529

علالت کی ابتدا

 

530

قرطاس کا واقع

 

532

ا ٓ نحضرت ﷺ کا ا ٓ خری خطبہ

 

534

وفات

 

537

تجہیز و تکفین

 

538

                                               متر و کا ت

 

541

زمین

 

541

جانور

 

542

ا سلحہ

 

544

ا ٓثار متبرکہ

 

544

دایہ

 

547

خدام خاص

 

547

حلیہ اقدس

ٍ

549

مہر بنوت

 

550

مو ئے مبارک

 

550

رفتار

 

550

    گفتگو اور خندہ تبسم

 

551

لباس

 

551

چادر

 

552

عبا

 

552

کمل

 

552

حلہ حمرا

 

552

نعلین

 

552

ابگو ٹھی

 

553

خور دزرہ

 

553

غذا اور طر یقہ طعام

 

553

پانی، دودھ، شر بت

 

554

معمولات طعام

 

554

خوش لباسی

 

554

مر غورنگ

 

555

نا مرغوب رنگ

 

555

خو شبو کا استعمال

 

555

سواری کا شوق

 

558

اسب دوانی

 

558

                                                        معمولات

 

560

صبح سے شام تک کے معمولات

 

560

خواب

 

560

عبادت شبانہ

 

561

معمولات نماز

 

562

معمولات خطبہ

 

563

معمولات جہاد

 

566

معمولات عیات و عزا

 

567

معمو لات ملاقات

 

567

معمو لات عامہ

 

569

مجالس نبو ی

 

570

دربار بنوت

 

570

مجالس ارشاد

 

571

آداب مجلس

 

572

عورتوں کے لیے مخصوص مجالس

 

574

طر یقہ ارشاد

 

574

مجالس میں شگفتہ مزاجی

 

575

فیض صحبت

 

576

خطابت بنو ی

 

577

طر ز بیان

 

577

خطبات کی نو عیت

 

578

اثر انگیزی

 

586

عبادات بنوی

 

589

دعا اور نماز

 

589

روزہ

 

594

زکو ۃ

 

595

حج

 

596

دوم ذکر الٰہی

 

596

ذوق شوق

 

597

میدان جنگ میں یا د الٰہی

 

599

اس ناشر کی دیگر مطبوعات

ایڈ وانس سرچ

اعدادو شمار

  • آج کے قارئین 1024
  • اس ہفتے کے قارئین 17094
  • اس ماہ کے قارئین 64254
  • کل قارئین56351268

موضوعاتی فہرست